چور کا لطیفہ

ایک چور چوری کرنے شیخ کےگھر پہنچا۔شیخ گھر کےصحن میں لیٹا تھا۔چور نےاپنی چادر زمین پر بچھائی اور خود کمرےسےسامان لینے چلا گیا
‏شیخ نےاسکی چادر اٹھا کر چھپا لی اور پھر سےسو گیا
‏چور آیا تو اس نےدیکھا،چادر ھی غائب ھے
‏اس نےاپنی قمیض اتارکر بچھائی اور پھر اندر سےسامان لینےگیا ‏شیخ نےقمیض بھی اٹھاکر چھپا لی
‏چور باھر آیا تو قمیض بھی غائب پائی
‏اب کی بار اس نےحوصلہ کرتےھوئے اپنی آخری ملکیت دھوتی بھی اتار کر بچھا دی اور ایک بار پھر اندر سامان لینے چلا گیا
‏ شیخ نےدھوتی بھی اٹھا لی
‏اب جب وہ باھر آیا تو دھوتی بھی غائب تھی۔چور الف ننگا انتہائی بیچارگی ‏کی حالت میں پریشان کھڑا تھا کہ شیخ صاحب نے اٹھ کر چور چور کا شور مچا دیا۔
‏چور نے انتہائی بے چارگی سے ایک تاریخی جملہ ادا کیا:
‏”او ظالما ،،، اجے وی میں ای چور آں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں